36

آغاسراج درانی کوبغیر کسی ثبوت کے گرفتار کیا،بلاول بھٹو زرداری

چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ سندھ اسمبلی پرافسوس ناک حملہ کیاگیا ہے، اسپیکر سندھ اسمبلی پیپلز پارٹی کا عہدہ نہیں ہے۔

اسپیکر سندھ اسمبلی سے ملاقات اور پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ سندھ اسمبلی پہلی اسمبلی ہے جس نے پاکستان کی قرارداد منظور کی، اس وقت کی اسمبلی میں بھی آغا سراج درانی کے رشتے دار تھے۔

انہوں نے کہا کہ مشرف کے بنائے گئے ادارے نے اسپیکر سندھ اسمبلی آغاسراج درانی کوبغیر کسی ثبوت اسلام آباد سے گرفتار کیا، گرفتاری کے بعد ثبوت تلاش کیے جارہے ہیں۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ جس طرح عورتوں اور بچوں کو یرغمال بنایا گیا اس کی مذمت کرتے ہیں،کسی بھی جمہوریت اور معاشرے میں ایسا نہیں ہوتا۔

چیئرمین پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ نیب کو سیاسی انجینئرنگ کے لیے استعمال نہ کیا جائے ، نیب کا قانون کالا قانون ہے بے نظیر شہید نے کہا تھا یہ قانون ختم کرنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جس طرح چادر اورچار دیواری کو پامال کیا گیا اس کی مذمت کرتے ہیں، چیئرمین نیب نے انسانی حقوق کی خلاف ورزی پر کوئی ایکشن نہیں لیا۔

آغا سراج کے گھر پر چھاپے کا مطلب ثبوت نہیں تھا، الیکشن کے دوران اس کیس پر سوموٹو لینے کا مقصد کیا ہے، تفتیش کے معاملے پر سوموٹو نہیں لیا جاسکتا یہ انسانی حقوق کا کیس نہیں، شہید ذوالفقار بھٹو اور محترمہ بے نظیر بھٹو کیس کا سوموٹو کیوں نہیں؟

Facebook Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں